جمعه,  19 اپریل 2024ء
کیا واقعی خواتین محرم کے بغیر حج کر سکتی ہیں؟ سعودی عرب نے وضاحت کردی

ریاض(روشن پاکستان نیوز) آئندہ حج کے قریب آتے ہی سعودی عرب کے حکام نے محرم کے بغیر سفر کرنے والی خواتین کے مسئلے پر ردعمل دیا ہے۔
سعودی عرب کی وزارت حج و عمرہ نے باضابطہ طور پر اعلان کیا ہے کہ اب خواتین کو حج کرنے کے لیے محرم ہونے کی ضرورت نہیں ہے اور یہ شرط اب تمام عازمین حج پر لاگو نہیں ہوتی۔

وزارت نے یہ بھی واضح کیا ہے کہ، 2019 کے حج کے لیے جو جون کے لیے مقررکیے گئے رجسٹریشن کے معیار کے ایک حصے کے طور پر، تمام گھریلو عازمین کو نیسیریا میننجائٹس اور سیزنل انفلوئنزا سے بچاؤ کے ٹیکے لگائے جائیں۔

اس بات پر تاکید کی جانی چاہیے کہ محرم خاندان کا وہ فرد ہے جس کے ساتھ نکاح ممنوع (حرام) ہوگا، اور یہ کہ ماضی میں خواتین کو محرم کے ساتھ حج پر جانا پڑتا تھا۔ سعودی عرب کی انتظامیہ نے اگلے حج کی تیاریوں کو حتمی شکل دینے کے لیے متعدد ممالک کے ساتھ معاہدوں پر دستخط کیے ہیں۔ فلائٹ شیڈول اور دیگر اہم معاملات اب حکومت کی جانب سے حل کیے جا رہے ہیں۔

اعداد و شمار کے مطابق ملک میں گزشتہ سال تقریباً 20 لاکھ اور عمرہ کرنے والوں کی تعداد 13 ملین سے زیادہ تھی۔ پچھلے سال ، بادشاہت نے وبائی امراض کے بعد موجود معاشرتی دوری کے اقدامات کو ہٹا دیا تھا ، جس نے سفر کو روکنے پر مجبور کردیا تھا۔

مزید خبریں

FOLLOW US

Copyright © 2024 Roshan Pakistan News