هفته,  20 جولائی 2024ء
جے یوآئی رہنماراشدسومروکی ریاست کیخلاف ہتھیار اٹھانے کی دھمکی

اسلام آباد(روشن پاکستان نیوز) جمعیت علمائے اسلام کے رہنما راشد سومرو کی ریاست کے خلاف ہتھیار اٹھانے کی دھمکی دیتے ہوئے کہا ہے کہ مجھے لگتا ہے جے یو آئی والوں کے ہاتھ ووٹ کیلئے نہیں، انقلاب کیلئے بنے ہیں۔

فضل الرحمان کیساتھ ایسارویہ اختیارکیاجائیگا توراستہ کون ساچھوڑیں گے، جمہوری راستہ نہیں ہوگا تو جے یو آئی کوئی بھی راستہ اختیار کرے گی۔

16ماہ کی حکومت ختم ہوئی تو پی ڈی ایم عملا ختم ہی ہوگئی تھی، ہم سب نے ایک دوسرے کیخلاف الیکشن لڑا تو پی ڈی ایم کا وجود نہیں تھا، 2018 اور 2024 دونوں میں انتخابات میں دھاندلی کی بات کی۔

نجی ٹی وی سے بات چیت میں انہوں نے کہاکہ فضل الرحمان وہ واحد ہیں، جنہوں نے ستائیس سے ستر سال تک کے شخص سے اسلحہ لے کر ووٹ کی پرچی دی۔

راشد سومرو کا کہنا تھا کہ فضل الرحمان کیساتھ ایسارویہ اختیارکیاجائیگا توراستہ کون ساچھوڑیں گے، جمہوری راستہ نہیں ہوگا تو جے یو آئی کوئی بھی راستہ اختیار کرے گی۔

رہنما جے یو آئی ف نے کہا کہ مجلس عاملہ کی ڈومین نہیں کہ وہ سیاست سے دستبرداری کا اعلان کرے، جنرل کونسل کو اختیار ہے کہ فیصلہ کرے پارلیمانی سیاست کرنی ہے یا نہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ مجھے لگتا ہے جے یو آئی والوں کے ہاتھ انقلاب کیلئے بنے ہیں ووٹ کیلئے نہیں، جنرل کونسل فیصلہ کرے گی کہ انقلاب کیلئے کون سا راستہ اختیار کرنا ہے۔

انہوں نے کہاکہ16 ماہ کی حکومت ختم ہوئی تو پی ڈی ایم عملا ختم ہی ہوگئی تھی، ہم سب نے ایک دوسرے کیخلاف الیکشن لڑا تو پی ڈی ایم کا وجود نہیں تھا، 2018 اور 2024 دونوں میں انتخابات میں دھاندلی کی بات کی۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ہم نے اس وقت بھی اور آج بھی کسی پارٹی کیخلاف دھاندلی کا الزام نہیں لگایا، 7ووٹ کیساتھ جے یو آئی اس وقت اسمبلی میں بیٹھ رہی ہے، جے یوآئی تواپوزیشن میں بیٹھنے کا فیصلہ کرچکی ہے، حکومت میں نہیں جائیں گے۔

راشد سومرو نے کہا کہ ہمارے اختلافات پی ٹی آئی کے ذہن کیساتھ ہیں، پی ٹی آئی اپنے ذہن کو درست کرتی ہے تو ہم ساتھ چل سکتے ہیں۔

مزید خبریں

FOLLOW US

Copyright © 2024 Roshan Pakistan News