پنجاب اسمبلی کے مکمل غیرسرکاری غیرحتمی نتائج ،کس کو کتنی نشستیں ملیں؟

لاہور(روشن پاکستان نیوز) پنجاب اسمبلی کے حلقوں کے غیر سرکاری غیر حتمی نتائج موصول ہو رہے ہیں جو عمران خان کی جماعت پاکستان تحریک انصاف کے حمایت یافتہ امیدواروں اور پاکستان مسلم لیگ نواز کے درمیان سخت مقابلے کی عکاسی کر رہے ہیں۔ مسلم لیگ (ن) 125 نشستوں کے ساتھ آگے ہے جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار 122 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

پنجاب اسمبلی کے نتائج یہ ہیں۔

یادرہے جہاں خانہ خالی ہے وہاں کے حلقے کے نتائج آنا ابھی باقی ہیں۔

پنجاب کے کسی بھی حلقے کے پہلے مکمل غیر سرکاری نتائج میں پی پی 203 ساہیوال سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد رائے مرتضیٰ کامیاب ہوئے۔ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد رائے مرتضیٰ 62468 ووٹ لے کر دوسرے اور مسلم لیگ ن کے حنیف جٹ نے 47231 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 253 بہاولپور سے آزاد اصغر 40461 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے، مسلم لیگ ن کے ظہیر اقبال 23490 ووٹ لے سکے۔

پی پی 1: پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار قاضی احمد اکبر نے 49257 ووٹ لے کر کامیابی حاصل کی جبکہ ن لیگ کے جہانگیر زادہ نے 36443 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 2: پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد علی 1077 ووٹ لے کر آگے ہیں جبکہ ن لیگ کے افتخار احمد نے 400 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 3: آزاد امیدوار سید اعجاز الحسن نے 36897 ووٹ حاصل کر کے مسلم لیگ ن کے حمید اکبر کو شکست دے کر نشست پر قبضہ کر لیا۔

پی پی 4: مسلم لیگ (ن) کے امیدوار چوہدری شیر علی خان 48593 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ ٹی ایل پی کے امیدوار ملک امانت راول 43685 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی پی 5: پی پی 5 اٹک پر مسلم لیگ ن کے ملک اعتبار خان نے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ امیدوار ملک جمشید الطاف کو شکست دے دی۔
خان نے 46665 ووٹ حاصل کیے جب کہ الطاف نے 43620 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 6: مسلم لیگ ن کے بلال یامین 65056 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ آزاد امیدوار 33475 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 7: غیر حتمی اور غیر سرکاری نتائج کے مطابق پی پی 07 راولپنڈی کی نشست پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد شبیر اعوان 72892 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے، جب کہ مسلم لیگ ن کے راجہ صغیر 66338 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی پی 8: پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ جاوید کوثر نے 127 ووٹ حاصل کیے جبکہ پی پی پی کے خرم پرویز نے 122 ووٹ لیے۔

پی پی 9: پی پی 09 راولپنڈی سے مسلم لیگ ن کے شوکت راجہ 50560 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔ پیپلز پارٹی کے چوہدری سرفراز 43525 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 10: پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار جاوید کوثر 47526 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ پیپلز پارٹی کے خرم پرویز نے 40603 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 11 راولپنڈی کی نشست پی پی 11 سے مسلم لیگ ن کے عمران الیاس 27657 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے، چوہدری محمد نذیر نے 16594 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 12: پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ سعد علی 531 ووٹ لے کر آگے ہیں جبکہ ن لیگ کے محسن ایوب نے 93 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 13: مسلم لیگ ن کے عمر فاروق نے 113 ووٹ حاصل کیے، آزاد فہد مسعود

پی پی 14 سے مسلم لیگ ن کے ملک افتخار احمد 40 ہزار 148 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 15 سے مسلم لیگ ن کے ملک منصور 62 ہزار 163 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 16 مسلم لیگ ن ضیاء اللہ شاہ 45478 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ آزاد امیدوار اعجاز خان 36402 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 17 سے مسلم لیگ ن کے راجہ عبدالحنیف 45 ہزار 677 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 18 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار اسد عباس 46295 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ مسلم لیگ ن کے سجاد خان 30640 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 19 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار 43987 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ مسلم لیگ ن کے امیدوار حاجی پرویز خان 16768 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 20 سے پاکستان مسلم لیگ نواز کے سلطان حیدر علی خان 52450 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 21: تحریک انصاف کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار طارق افضل 2925 ووٹ لے کر آگے ہیں جبکہ مسلم لیگ ن کے تنویر اسلم نے 1492 ووٹ لیے۔

پی پی 22 سے مسلم لیگ ن کے سردار غلام عباس 61 ہزار 714 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 23 سے مسلم لیگ ن کے شہریار ملک 86 ہزار 120 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 24 سے مسلم لیگ ن کے سید رفعت زیدی 55029 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 25 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار یاسر محمود 67 ہزار 391 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 26 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار مشتاق احمد 60 ہزار 181 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 27 سے مسلم لیگ کے راجہ محمد اسلم خان 34 ہزار 754 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

PP-28 زیر التواء

پی پی 30 سے ​​مسلم لیگ کے خالد جاوید اصغر گھرال 46 ہزار 795 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پنجاب اسمبلی کے حلقہ پی پی 31 گجرات V سے مسلم لیگ کے شافع حسین 64 ہزار 132 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 32: چوہدری سالک حسین 55615 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔ جبکہ چوہدری پرویز الٰہی نے 44713 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 33 سے مسلم لیگ کے سید مدد علی شاہ 35 ہزار 351 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 34: پی ٹی آئی کی حمایت یافتہ ثمرہ الٰہی 2763 ووٹ لے کر آگے ہیں جبکہ ٹی ایل پی کے چوہدری فرخ عمران 1270 ووٹ لے کر آگے ہیں۔

پی پی 35 سے مسلم لیگ کے وقار احمد چیمہ 60 ہزار 962 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 36: پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ محمد احمد چٹھہ 87549 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 37 سے مسلم لیگ کے میاں شاہد حسین خان 59 ہزار 853 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 38 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ ضمیر الحسن بھٹی 52 ہزار 213 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 39 سے مسلم لیگ کے محمد عون جھانگیر 41 ہزار 866 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 40 سے پی ٹی آئی کی حمایت یافتہ زرنب شیر 74 ہزار 460 ووٹ لے کر کامیاب ہوئیں

پی پی 41 سے پی ٹی آئی کی حمایت یافتہ بسمہ چوہدری 70 ہزار 159 ووٹ لے کر کامیاب ہوئیں۔

پی پی 42 سے مسلم لیگ کے چوہدری محمود رانجھا 39 ہزار 767 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 43 سے مسلم لیگ کے چوہدری اختر عباس بوسال 45 ہزار 566 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 44 سے مسلم لیگ کے آصف اقبال 46 ہزار 308 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 45 سے مسلم لیگ کے طارق سبحانی 63 ہزار 651 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 46 سے مسلم لیگ کے فیصل اکرم 55 ہزار 254 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 47 سے مسلم لیگ کے خواجہ منشاء اللہ بٹ 50 ہزار 602 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 48 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ خرم خان ورک 47 ہزار 340 ووٹ لے کر کامیاب

پی پی 49 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ محمد فیاض 48 ہزار 219 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 50 سے مسلم لیگ کے چوہدری نوید اشرف 45 ہزار 627 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 51 سے مسلم لیگ کے ذیشان رفیق 49 ہزار 538 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 52 سے مسلم لیگ کے چوہدری ارشد جاوید وڑائچ 58 ہزار 385 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 53 سے مسلم لیگ کے رانا عبدالستار 59 ہزار 307 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 54 نارووال کی نشست پی پی 54 سے مسلم لیگ ن کے احسن اقبال 33243 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔ انہوں نے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار اویس قاسم کو شکست دی جنہوں نے 31050 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 55 سے ٹی ایل پی کے محمود احمد 33 ہزار 793 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 56 سے مسلم لیگ کے منان خان 48 ہزار 889 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 57 سے مسلم لیگ ن کے خواجہ محمد وسیم 52272 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے۔

پی پی 58 سے مسلم لیگ کے بلال اکبر خان 55 ہزار 396 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 59 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ محمد ناصر چیمہ 37 ہزار 478 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 60 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ علیم اللہ خان 36 ہزار 746 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 61: گوجرانوالہ کی نشست پی پی 61 سے مسلم لیگ ن کے عمران خالد لیکن 34981 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 62 سے مسلم لیگ ن کے محمد نواز چوہان 30 ہزار 596 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔
پی پی 63 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ چوہدری محمد طارق 51 ہزار 315 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 64: گوجرانوالہ کی نشست پی پی 64 سے مسلم لیگ ن کے عمر فاروق 33713 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔ آزاد امیدوار چوہدری محمد علی نے 28460 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 65 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ حسن علی 36 ہزار 499 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 66 سے مسلم لیگ کے قیصر اقبال 49 ہزار 931 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 67 سے مسلم لیگ کے اختر علی خان 39 ہزار 320 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 68: غیر سرکاری اور غیر مصدقہ نتائج کے مطابق آزاد امیدوار محمد ارقم خان 43615 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ مسلم لیگ ن کے محمد اقبال نے 40311 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 69 سے مسلم لیگ کے عرفان بشیر 47 ہزار 902 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 70: آزاد امیدوار تشکل عباس 37709 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے، مسلم لیگ ن کے امان اللہ وڑائچ 28874 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی پی 71: سرگودھا کی نشست پی پی 71 سے مسلم لیگ ن کے صہیب احمد ملک 55050 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔ پی ٹی آئی کے بانی کے وکیل نعیم حیدر پنجوٹھا کو شکست کا سامنا کرنا پڑا کیونکہ انہوں نے 49076 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 72: سرگودھا کی نشست پی پی 72 سے مسلم لیگ ن کے منصور اعظم 50408 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔ چوہدری سہیل اختر 41636 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی پی 73

پی پی 74 سے مسلم لیگ کے اکرام الحق 51 ہزار 650 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 75

پی پی 76

پی پی 77

پی پی 78

پی پی 79 سے مسلم لیگ کے تیمور علی خان 42 ہزار 494 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 80 سے مسلم لیگ کے سردار محمد عاصم شیر میکن 38 ہزار 332 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 81 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ حسن ملک 46 ہزار 983 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 82 سے مسلم لیگ کے محمد آصف ملک 41 ہزار 575 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 83 سے مسلم لیگ کے علی حسین خان 47 ہزار 932 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔
پی پی 84 پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ فتح خالق 49 ہزار 820 ووٹ لے کر کامیاب

پی پی 85 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ محمد اقبال 92 ہزار 407 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

PP-86: آزاد امیدوار امین اللہ خان سیکیورٹی 85318 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ ان کے مدمقابل ایک اور آزاد امیدوار عادل عبداللہ نے 19794 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 87: پی پی کی میانوالی کی نشست پی پی 87 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار احمد خان فاتح قرار پائے۔ سجاد احمد ملک 15691 ووٹ لے سکے۔

پی پی 88: پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار ملک ممتاز 67 ہزار 485 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ مسلم لیگ ن کے فیروز جوئیہ 59 ہزار 296 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی پی 89 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار امیر محمد خان 61 ہزار 745 ووٹ لے کر کامیاب

پی پی 90: پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ امیدوار عرفان اللہ خان نیازی 43957 ووٹ لے کر دوسرے جبکہ احمد نواز خان نے 43692 ووٹ حاصل کیے۔ پی پی 90 بکھر کی نشست پر یہ قریبی مقابلہ تھا۔

پی پی 91 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار غضنفر عباس 62,027 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

PP-92: غیر حتمی اور غیر سرکاری نتائج کے مطابق آزاد امیدوار عامر عنایت 41084 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے۔

PP-93: آزاد امیدوار محمد عامر عنایت 50580 ووٹ لے کر PP-93 بکھر سے کامیاب ہوئے۔

PP-94: تیمور علی خان آزاد امیدوار کے طور پر الیکشن لڑتے ہوئے PP-94 بکھڑ سے 47879 ووٹ لے کر فاتح قرار پائے۔

پی پی 95 سے مسلم لیگ کے محمد الیاس 36 ہزار 717 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 96 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار سید ذوالفقار علی شاہ 52 ہزار 721 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 97 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد ثاقب خان 42 ہزار 959 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 98 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار جنید افضل ساہی 73 ہزار 536 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 99 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار احمد مجتبی چوہدری 55 ہزار 991 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 100 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار عمیر وصی چوہدری 48 ہزار 298 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 101 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد اکرم چوہدری 73,097 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 102 سے مسلم لیگ کے آفر علی ہوچہ 30 ہزار 558 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 103 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار نور شاہد نور 35 ہزار 431 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 104 سے مسلم لیگ کے عارف محمود گل 53 ہزار 866 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 105 سے مسلم لیگ کے راؤ کاشف رحیم خان 58 ہزار 77 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 106 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار احسن رضا 51 ہزار 892 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 107 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار جاوید نیاز منج 27 ہزار 609 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 108 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار آفتاب احمد خان 60 ہزار 677 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔
پی پی 109 سے مسلم لیگ ن کے چوہدری ظفر اقبال ناگرہ 54 ہزار 581 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 110 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد اکرم چوہدری 73,097 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 111 فیصل آباد سے آزاد امیدوار بشارت علی 45575 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے۔ مسلم لیگ ن کے فقیر حسین 36349 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 112 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد اسد محمود 75 ہزار 538 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 113 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار ندیم صادق ڈوگر 53 ہزار 677 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 114 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد لطیف نذیر 58 ہزار 542 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 115 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار شاہد جاوید 53 ہزار 244 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 116 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد اسماعیل 67,016 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 117 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار عبدالرزاق خان 54 ہزار 170 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 118 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار خیال احمد 79 ہزار 303 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 119 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار اسد زمان 78 ہزار 105 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 120 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد احسن احسان 56 ہزار 490 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 121 سے مسلم لیگ ن کے امجد علی 58 ہزار 432 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 122 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار خاور احمد خان 71 ہزار 414 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 123 سے پی ٹی آئی کی حمایت یافتہ آزاد امیدوار آصفہ ریاض فتیانہ 51 ہزار 219 ووٹ لے کر کامیاب ہوئیں۔

پی پی 124: ٹوبہ ٹیک سنگھ کی نشست پی پی 124 سے پی ٹی آئی کی حمایت یافتہ آزاد امیدوار سونیا علی رضا نے 62062 ووٹ لے کر مسلم لیگ ن کے سید قطب علی شاہ کو شکست دی۔

پی پی 125 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار سردار الحاج غلام احمد خان گاڈی 55 ہزار 734 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 126 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار مہر محمد نواز 45 ہزار 400 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 127 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد شیخ محمد اکرم 50 ہزار 232 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 128 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار غضنفر عباس شاہ 62 ہزار 356 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 129 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار میاں محمد آصف 37 ہزار 235 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 130 سے ​​پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار شہباز احمد 67 ہزار 618 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 131 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار میاں محمد اعظم 73 ہزار 201 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 132 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد احسن احسان 56 ہزار 490 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 133 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد عاطف 45 ہزار 637 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 134 سے مسلم لیگ ن کے امجد علی 39 ہزار 503 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 135 سے مسلم لیگ ن کے آغا علی حیدر 56 ہزار 798 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 136 سے مسلم لیگ ن کے محمد حسن ریاض 52 ہزار 682 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 137: پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد خرم اعجاز 2512 ووٹ لے کر آگے ہیں جبکہ مسلم لیگ ن کے محمد ارشد نے 1188 ووٹ حاصل کیے۔
پی پی 138 سے مسلم لیگ ن کے محمد اشرف رسول 52 ہزار 682 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 139 سے مسلم لیگ ن کے رانا تنویر حسین 35 ہزار 659 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 140 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد اویس 51 ہزار 372 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 141 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار طیب رشید 61409 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔ انہوں نے مسلم لیگ ن کے امجد لطیف کو شکست دی جنہوں نے 38612 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 142 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار وقاص محمود مان 49 ہزار 492 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 143 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار شیر اکبر خان 52 ہزار 415 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 144 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد سرفراز ڈوگر 58 ہزار 413 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 145 سے مسلم لیگ ن کے سمیع اللہ خان 42 ہزار 578 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 146: غیر حتمی اور غیر سرکاری نتائج کے مطابق اس نشست پر مسلم لیگ (ن) کے غزالی سلیم 30587 ووٹ لے کر کامیاب جبکہ جنید رزاق 28515 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 147 سے حمزہ شہباز 51 ہزار 838 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 148 سے پاکستان مسلم لیگ نواز کے مجتبیٰ شجاع فاتح قرار پائے۔ شجاع نے 37998 جبکہ آزاد امیدوار نے 31560 ووٹ حاصل کئے۔

پی پی 149:تحریک پاکستان پارٹی کے صدر عبدالعلیم خان پی پی 149 لاہور سے 51756 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 150 سے مسلم لیگ (ن) کے عمران نذیر 34956 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جب کہ آزاد امیدوار نے 30314 ووٹ حاصل کیے۔

PP-151: فاتح- سہیل شوکت بٹ (PMLN)

PP-152 کے فاتح- ملک وحید (PMLN)

PP-153 کے فاتح-خواجہ سلمان رفیق (PMLN)

PP-154 کے فاتح- خواجہ سلمان رفیق (PMLN)

PP-155 کے فاتح شیخ امتیاز (IND-PTI)

PP-156 کے فاتح علی امتیاز وڑائچ (IND-PTI)

پی پی 157: اس نشست پر پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار حافظ فرحت 45036 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جب کہ مسلم لیگ ن کے نصیر احمد نے 27039 ووٹ حاصل کیے۔

PP-158: فاتح- شہباز شریف (PMLN)

پی پی 159: پی پی 159 کی نشست پر مسلم لیگ (ن) کی مریم نواز 23598 ووٹ لے کر کامیاب رہیں جب کہ آزاد امیدوار میر شرافت علی نے 21491 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 160 کے فاتح ملک اسد کھوکھر (پی ایم ایل این)

PP-161 کے فاتح-فرخ جاوید مون (IND-PTI)

PP-162 کے فاتح- شبیر احمد گجر (IND-PTI)

پی پی 163: پی پی 163 کی نشست پر مسلم لیگ ن کے عمران جاوید 23120 ووٹ لے کر کامیاب۔

پی پی 164 لاہور کی نشست پی پی 164 سے مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف 27099 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے، جب کہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد یوسف نے 25919 ووٹ حاصل کیے۔
PP-165 کے فاتح احمر بھٹی (IND-PTI)

پی پی 166 لاہور سے مسلم لیگ ن کے محمد انس 32270 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔ آزاد امیدوار خالد محمود نے 30611 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 167: پی پی 167 لاہور کی نشست سے مسلم لیگ (ن) کے عرفان شفیع 23248 ووٹ لے کر جیت گئے۔ان کے مدمقابل آزاد امیدوار عمر بشیر نے 21169 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 168 سے مسلم لیگ ن کے فیصل ایوب 32727 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ آزاد امیدوار ملک ندیم نے 27577 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 169 کے فاتح- خالد پرویز کھوکھر (پی ایم ایل این)

پی پی 170: پی پی 170 کی نشست پی پی 170 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار ہارون اکبر 64143 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے، مسلم لیگ ن کے رانا احسن شرافت 40661 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

PP-171 کے فاتح- میاں اسلم اقبال (IND-PTI)

PP-172 فاتح- مصباح واجد (IND-PTI)

پی پی 173 کے فاتح میاں مرغوب (پی ایم ایل این)

PP-174- فاتح بلال یٰسین (PMLN)

پی پی 175 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار راشد طفیل 44 ہزار 932 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 176 سے مسلم لیگ ن کے چوہدری محمد الیاس خان 48 ہزار 328 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 177 سے مسلم لیگ ن کے محمد نعیم صفدر 45 ہزار 633 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 178 سے مسلم لیگ ن کے ملک احمد سعید خان 53 ہزار 90 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 179 سے مسلم لیگ ن کے ملک محمد احمد خان 65 ہزار 617 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

PP-180: وقاص حسین پی پی 180 قصور سے کامیاب۔ وقاص نے 21650 ووٹ حاصل کیے جبکہ ان کے مدمقابل آئی پی پی سے تعلق رکھنے والے ہاشم ڈوگر نے 12350 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 181 سے پی ٹی آئی کی حمایت یافتہ آزاد امیدوار عاجز ثنا کریمی 49 ہزار 551 ووٹ لے کر کامیاب ہوئیں۔

پی پی 182 سے مسلم لیگ ن کے محمود انور 32 ہزار 326 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 183 سے مسلم لیگ ن کے رانا سکندر حیات 51 ہزار 422 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 184 سے مسلم لیگ ن کے رانا محمد اقبال خان 44 ہزار 365 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 185: اس نشست سے مسلم لیگ (ن) کے جاوید علاؤالدین 52106 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے، آزاد امیدوار محمد جاوید نے 46290 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 186 سے مسلم لیگ ن کے سید محمد عاشق حسین شاہ 43 ہزار 236 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 187 سے مسلم لیگ ن کے چوہدری افتخار حسین چھچھر 45 ہزار 810 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔
پی پی 188 سے مسلم لیگ ن کے نور الامین وٹو 56 ہزار 596 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 189 سے مسلم لیگ ن کے علی عباسی 40 ہزار 467 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 190 اوکاڑہ کی نشست پی پی 190 سے مسلم لیگ ن کے یاور زمان 63899 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔ آزاد امیدوار مہر عبدالستار 52600 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی پی 191 سے مسلم لیگ ن کے میاں محمد منیر 45 ہزار 719 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 192 اوکاڑہ سے مسلم لیگ ن کے غلام رضا 64174 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ آزاد امیدوار حماد اسلم 57327 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی پی 193 سے مسلم لیگ ن کے فاروق احمد خان مانیکا 40 ہزار 172 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 194 سے مسلم لیگ ن کے چوہدری جاوید احمد 38 ہزار 584 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 195

پی پی 196

پی پی 197

پی پی 198

پی پی 199

پی پی 200

پی پی 201

پی پی 202: مسلم لیگ ن کے امیدوار رانا ریاض 13714 ووٹ لے کر آگے ہیں جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ وحید اصغر 12946 ووٹ لے کر آگے ہیں۔

PP-203: پنجاب کے کسی بھی حلقے کے پہلے مکمل غیر سرکاری نتائج میں، PP-203 ساہیوال سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد رائے مرتضیٰ کامیاب ہو گئے۔ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد رائے مرتضیٰ 62468 ووٹ لے کر دوسرے اور مسلم لیگ ن کے حنیف جٹ نے 47231 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 204: پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد غلام سرور 45130 ووٹ لے کر آگے ہیں جبکہ آئی پی پی کے امیدوار ملک فلک شیر 34241 ووٹ لے کر آگے ہیں۔

پی پی 205

پی پی 206

پی پی 207

پی پی 208

پی پی 209

پی پی 210

پی پی 211

پی پی 212

پی پی 213

پی پی 214

پی پی 215

پی پی 216

پی پی 217

پی پی 218

پی پی 219

پی پی 220: پنجاب اسمبلی کی نشست پی پی 220 ملتان سے پاکستان پیپلز پارٹی کے محمد اقبال 42433 ووٹ لے کر دوسرے جبکہ مسلم لیگ (ن) کے رائے منصب علی 33272 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی پی 221 ملتان کی نشست پی پی 221 سے پیپلز پارٹی کے میاں کامران 43117 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جب کہ آزاد امیدوار محمد عامر عباس 32882 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 222: پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ ایاز 10777 ووٹ لے کر آگے ہیں جبکہ مسلم لیگ ن کے اعزاز احمد 8201 ووٹ لے کر آگے ہیں۔

پی پی 223

پی پی 224 ملتان کی نشست پی پی 224 سے مسلم لیگ (ن) کے ملک لعل محمد نے کامیابی حاصل کی جبکہ آزاد امیدوار عباس بخاری 28433 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 225

پی پی 226 پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ رضی اللہ 2378 ووٹ لے کر آگے ہیں جبکہ ن لیگ کے امیدوار 2295 ووٹ لے کر آگے ہیں۔

پی پی 227: پی پی 227 لودھراں سے مسلم لیگ ن کے زبیر خان کامیاب ہو گئے۔ مسلم لیگ ن کے امیدوار نے 55324 ووٹ حاصل کیے جب کہ آزاد امیدوار نواب امین نے 36734 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 228

پی پی 229

پی پی 230

پی پی 231: پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ خالد نثار 28467 ووٹ لے کر آگے ہیں جبکہ ن لیگ کے امیدوار خالد محمود 16406 ووٹ لے کر آگے ہیں۔

پی پی 232

پی پی 233

پی پی 234

پی پی 235

پی پی 236: غیر سرکاری اور غیر مصدقہ اطلاعات کے مطابق اس نشست سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ امیدوار علی رضا خاکوانی 61415 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے، جب کہ مسلم لیگ ن کے آصف سعید نے 54211 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 237

PP-238: PP-238 بہاولنگر سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار انعام باری فاتح قرار پائے۔ باری نے 54500 ووٹ لیے جبکہ مسلم لیگ ن کے سید نذر نے 49401 ووٹ حاصل کیے
پی پی 239

پی پی 240

پی پی 241: مسلم لیگ (ن) کے غلام مرتضیٰ 5633 ووٹ لے کر آگے، مسلم لیگ ن کے مظہر اقبال 3702 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی پی 242

پی پی 243

پی پی 244

پی پی 245

پی پی 246

پی پی 247

پی پی 248

پی پی 249

پی پی 250

پی پی 251: مسلم لیگ ن کے ملک محمود بابر نے آزاد امیدوار محمد عثمان کو شکست دے دی۔ پی پی 251 بہاولنگر سے بابر نے 43551 ووٹ حاصل کیے جبکہ عثمان نے 29419 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 252

پی پی 253: آزاد اصغر 40461 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے، مسلم لیگ ن کے ظہیر اقبال 23490 ووٹ لے سکے۔

پی پی 254

پی پی 255

پی پی 256

پی پی 257 سے پاکستان مسلم لیگ نواز کے محمود احمد 39968 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے، پیپلز پارٹی کے محمد اسلام اسلم 27560 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 258:

پی پی 259 سے آزاد امیدوار فیصل جمیل 53018 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے، جبکہ میاں شفیع 20824 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی پی 260

پی پی 261

پی پی 262

پی پی 263

پی پی 264
پی پی 265: پنجاب اسمبلی کی نشست پی پی 265 رحیم یار خان سے آزاد امیدوار سجاد احمد 52817 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 266

پی پی 267

پی پی 268

پی پی 269

پی پی 270

پی پی 271

پی پی 272: پی پی 272 مظفر گڑھ کی نشست پی پی 272 سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار رانا عبدالمنان 33453 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ مسلم لیگ ن کے سید باسط سلطان 29934 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی پی 273

پی پی 274

پی پی 275

پی پی 276

پی پی 277

پی پی 278

پی پی 279: پی پی 279 لیہ سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار اطہر مقبول 54423 ووٹ لے کر کامیاب۔ مسلم لیگ ن کے ملک احمد نے 51478 ووٹ حاصل کیے۔

پی پی 280

پی پی 281: پی پی 281 لیہ سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار شعیب امیر 38353 ووٹ لے کر کامیاب۔ مسلم لیگ ن کے محمد طاہر 34870 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 282

پی پی 283: پنجاب اسمبلی کی نشست لیہ سے آزاد امیدوار غلام اصغر خان 56985 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔ مسلم لیگ ن کے مہر اعجاز 52161 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

پی پی 284

پی پی 285

پی پی 286

پی پی 287

پی پی 288

پی پی 289

پی پی 290

پی پی 291

پی پی 292

پی پی 293

پی پی 294

پی پی 295

پی پی 296

پی پی 297