نواز شریف نے اتحاد ی حکومت بنانے کا اعلان کر دیا

لاہور (روشن پاکستان نیوز) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے قائد اور سابق وزیراعظم نواز شریف نے عام انتخابات کے نتائج میں ملک کی سب سے بڑی جماعت ہونے کے باعث دیگر سیاسی جماعتوں اور آزاد امیدواروں کو مل بیٹھنے کی دعوت دی ہے۔

جمعہ کو ماڈل ٹاؤن لاہور میں کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے میاں نواز شریف نے کہا کہ میں آپ کی آنکھوں میں چمک دیکھ رہا ہوں، یہ چمک کہہ رہی ہے کہ ہماری زندگیوں میں روشن تبدیلی آنی چاہیے، یہ چمک کہہ رہی ہے کہ پاکستان کو انصاف کے کٹہرے میں لایا گیا ہے، میاں نواز شریف نے کہا کہ یہ ہمارا فرض ہے۔ پاکستان کو بحران سے نکالنے کے لیے

ہم تمام جماعتوں کے مینڈیٹ کا احترام کرتے ہیں چاہے وہ پارٹی ہو یا آزاد عوام، ہم انہیں پاکستان کی مشکلات سے نکالنے میں مدد کی دعوت دیتے ہیں اور کہتے ہیں کہ آؤ ہمارے ساتھ بیٹھو، ہمارا ایجنڈا صرف خوشحال پاکستان ہے۔

نواز شریف نے کہا کہ کیا آپ جانتے ہیں کہ اس ملک کے لیے کس نے کیا کیا؟ ہم نے کس طرح معاشی مشکلات سے نکل کر معیشت کو ٹھیک کیا، ہمیں مینڈیٹ ملا ہے، ملک کو اس بھنور سے نکالنے کے لیے تمام جماعتیں اکٹھی ہوں، یہ سب کا پاکستان ہے، سب کو اس سے نکلنا ہے۔ ایک ساتھ بنور.

رہنما مسلم لیگ ن کا کہنا تھا کہ سیاستدان، پارلیمنٹ، افواج پاکستان، میڈیا سب کو مل کر مثبت کردار ادا کرنا چاہیے۔ ملک میں استحکام کے لیے کم از کم دس سال درکار ہیں۔ ہو جائے گا

انہوں نے سادہ اکثریت نہ ملنے پر مخلوط حکومت بنانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ میاں شہباز شریف کو آصف زرداری، مولانا فضل الرحمان اور خالد مقبول صدیقی سے ملاقات کا ٹاسک دیا گیا ہے۔