حساس پولنگ اسٹیشن پر واپڈا اہلکاروں اورسی سی ٹی وی کیمرے لگانیوالی ٹیم کے درمیان ہا تھا پائی

بھوآنہ (روشن پاکستان نیوز) پنجاب کے علاقے بھوانہ میں حساس پولنگ سٹیشن پر سی سی ٹی وی کیمرے لگانے والی ٹیم اور واپڈا اہلکاروں کے درمیان ہاتھا پائی ہو گئی۔ واپڈا ہائیڈر الیکٹرک یونین نے کاغذات داخل ہونے تک احتجاج جاری رکھنے کا اعلان کیا ہے۔

واپڈا سب ڈویژن آفس بھوانہ کو ایکشن 2024 کے لیے حساس پولنگ اسٹیشن قرار دیا گیا ہے جہاں سی سی ٹی وی کیمرے لگانے آنے والی ٹیم اور غلام عباس میں کیمرے لگانے یا نہ لگانے پر اسٹنٹ لائن میں جھگڑا ہوگیا۔

زبانی تکرار کے بعد معاملہ ہاتھا پائی تک پہنچ گیا۔ واپڈا اہلکار کے مطابق سی سی ٹی وی انسٹال کرنے والی ٹیم نے انہیں شدید زدوکوب کیا جس پر بھوانہ میں واپڈا سب ڈویژنل آفس میں احتجاج کیا گیا۔

اس موقع پر واپڈا حیدرآباد الیکٹرک یونین ڈورل سیکرٹری محمد عارف ہرل نے کہا کہ ہم اپنے کسی ساتھی کے خلاف سرد مہری برداشت نہیں کریں گے۔ واقعے کے بعد واپڈا اہلکار کی جانب سے پولیس کو درخواست جمع کرادی گئی ہے۔

واپڈا یونین کا کہنا ہے کہ اگر متعلقہ بددیانتی کے خلاف کارروائی نہ کی گئی تو وہ احتجاج کو مسلح ڈویژن تک لے جائیں گے۔

اس حوالے سے اسٹنٹ کمشنر بھوآنہ طارق محمود کا کہنا ہے کہ اگر ایسا کوئی واقعہ ثابت ہوا تو غلطی کرنے والے کے خلاف سخت قانونی کارروائی کی جائے گی اور انتخابی عمل ہر صورت پرامن طریقے سے مکمل کیا جائے گا۔