سندھ کے 19 ہزار پولنگ اسٹیشنز میں سے 6 ہزار 801 انتہائی حساس قرار

اسلام آباد (روشن پاکستان نیوز)عام انتخابات 2024 میں سندھ کے 19 ہزار 8 پولنگ اسٹیشنز میں سے 6 ہزار 550 پولنگ اسٹیشنز کو حساس اور 6 ہزار 801 کو انتہائی حساس قرار دیا گیا ہے۔

نگراں وزیراعلیٰ سندھ جسٹس (ر) مقبول باقر کی زیر صدارت 30ویں صوبائی ایپکس کمیٹی کا اجلاس وزیراعلیٰ ہاؤس میں ہوا، جس میں انتخابی انتظامات اور نیشنل ایکشن پلان کا جائزہ لیا گیا۔

اجلاس میں صوبائی وزراء بریگیڈیئر (ر) حارث نواز، عمر سومرو، احمد شاہ، کور کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل بابر افتخار، چیف سیکرٹری ڈاکٹر فخر عالم، ڈی جی رینجرز میجر جنرل اظہر وقاص، آئی جی پولیس رفعت مختار، ایڈووکیٹ جنرل حسن اکبر، سیکرٹری داخلہ موجود تھے۔ میٹنگ میں اقبال میمن اور دیگر نے شرکت کی۔

وزیراعلیٰ نے آئندہ الیکشن کے انتظامات کا جائزہ لیا، کمیٹی کو بتایا گیا کہ کل 19 ہزار 8 پولنگ اسٹیشنز ہوں گے جن میں 5 ہزار 657 نارمل، 6 ہزار 550 حساس اور 6 ہزار 801 انتہائی حساس پولنگ اسٹیشنز شامل ہیں۔

آئی جی پولیس رفعت مختار نے پولیس کی تعیناتی کے بارے میں بتاتے ہوئے کہا کہ نارمل پولنگ اسٹیشن پر چار پولیس اہلکار، حساس پولنگ اسٹیشن پر پانچ اور انتہائی حساس پولنگ اسٹیشن پر سات پولیس اہلکار تعینات ہوں گے۔

پولنگ سٹیشنوں پر مجموعی طور پر 143,156 پولیس اہلکار تعینات ہوں گے جن میں 95,400 جنرل پولنگ سٹیشنز، 10,648 QRF پولیس اور 37,108 معاون فورس کے اہلکار شامل ہیں۔

پولیس فورس کے علاوہ رینجرز اور فوج کو منتخب انتہائی حساس پولنگ اسٹیشنز پر QRF ڈیوٹیوں کے لیے تعینات کیا جائے گا۔

کور کمانڈر کراچی لیفٹیننٹ جنرل بابر افتخار نے وزیر اعلیٰ سندھ کو بتایا کہ عام انتخابات کے دوران صوبے بھر میں تیسرے درجے کے فوجی دستے بھیجے گئے ہیں۔