رواں ماہ سیمنٹ کی قیمتوں میں اضافہ یاکمی ؟دیکھیں خبر

اسلام آباد(کامرس ڈیسک)241 ملین کی آبادی والا ملک پاکستان سیمنٹ کی ایک بڑی صنعت رکھتا ہے۔ سیمنٹ کی صنعت کو معیشت کی نام نہاد ریڑھ کی ہڈی کہا جاتا ہے۔حالیہ برسوں میں، سیمنٹ کی صنعت نے پیداوار اور صلاحیت دونوں میں مسلسل ترقی دیکھی ہے.

پاکستان میں سیمنٹ کمپنیاں
پاکستان میں سیمنٹ بنانے والی سب سے بڑی کمپنی لکی سیمنٹ لمیٹڈ ہے جسکے بعد ڈی جی خان سیمنٹ کمپنی لمیٹڈ، اٹک سیمنٹ، کوہ نور سیمنٹ، پاور سیمنٹ اور دیوان سیمنٹ کا نمبر آتا ہے۔

دیگر مشہور سیمنٹ مینوفیکچررز میپل لیف سیمنٹ اور بیسٹ وے سیمنٹ ہیں۔

پاکستان میں سیمنٹ کی قیمتیں
سیمنٹ کمپنیوں کی فی بوری قیمت
بیسٹ وے سیمنٹ 1,240-1,250 روپے
میپل لیف سیمنٹ 1,255-1,265 روپے
عسکری سیمنٹ 1,235-1,245 روپے
فوجی سیمنٹ 1,235-1,245 روپے
لکی سیمنٹ روپے 1,230-1,245
کوہاٹ سیمنٹ 1,225-1,240 روپے
چیرٹ سیمنٹ 1,225-1,235 روپے
پکسیم سیمنٹ 1,265-1,275 روپے
پاور سیمنٹ 1,225-1,235 روپے
ڈی جی خان سیمنٹ 1,255-1,265 روپے
پائنیئر سیمنٹ روپے 1,235-1,245
پیئر سیمنٹ روپے 1,230-1,235
فالکن سیمنٹ 1,235-1,245 روپے
پاکستان کو 1,220-1,230 روپے جرمانہ

حال ہی میں سیمنٹ کی ترسیل میں کمی دیکھی گئی کیونکہ جنوری 2024 کے دوران کل بائینڈر ترسیل 3.414 ملین ٹن رہی جو گزشتہ مالی سال کے اسی مہینے کے دوران 4.006 ملین ٹن تھی۔آل پاکستان سیمنٹ مینوفیکچررز ایسوسی ایشن (اے پی سی ایم اے) کی جانب سے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق جنوری 2024ء کے دوران مقامی سیمنٹ کی ترسیل 2.967 ملین ٹن رہی جو جنوری 2023ء کے 3.588 ملین ٹن کے مقابلے میں 17.3 فیصد کمی کو ظاہر کرتی ہے۔
تاہم برآمدات میں 6.82 فیصد اضافہ ہوا کیونکہ حجم جنوری 2023 میں 418,067 ٹن سے بڑھ کر جنوری 2024 میں 446,595 ٹن ہو گیا۔ جنوری 2024 ء میں نارتھ بیسڈ ملوں نے 2.434 ملین ٹن سیمنٹ بھیجا جو جنوری 2023 ء کے 2.892 ملین ٹن کے مقابلے میں 15.83 فیصد کمی کو ظاہر کرتا ہے۔ جنوبی ممالک کی ملوں نے جنوری 2024 کے دوران 979,970 ٹن سیمنٹ بھیجا جو جنوری 2023 کے 1.115 ملین ٹن کے مقابلے میں 12.08 فیصد کم ہے۔

جنوری 2024 میں سیمنٹ کی فروخت میں 14.79 فیصد کمی واقع ہوئی