جمعه,  21 جون 2024ء
کلاؤڈ آفس کے قیام کی تیاریاں، کابینہ کی منظوری سے مشروط

اسلام آباد ( روشن پاکستان نیوز  )وزارت آئی ٹی کابینہ کی منظوری کے بعد مستقل کلاؤڈ آفس کے قیام کے لیے پوری طرح تیار ہے۔موبائل ورچوئل نیٹ ورک آپریٹر سروسز کے لیے ڈرافٹ فریم ورکوزارت مستقل کلاؤڈ آفس کے لیے ایک انتہائی ہنر مند اور پیشہ ور ٹیم کو جمع کرنے کے لیے وقف ہے، جس میں اس شعبے کی جامع معلومات کے حامل ماہرین شامل ہیں۔

کلاؤڈ آفس کا ابتدائی سیکرٹریٹ وزارت آئی ٹی اور ٹیلی کام کے احاطے میں واقع ہوگا، جس میں کام کے بوجھ کے تقاضوں کے مطابق زیادہ مناسب جگہ پر منتقل ہونے کے ممکنہ منصوبے ہیں۔حکومت نے فروری 2022 میں پاکستان کی کلاؤڈ فرسٹ پالیسی کی منظوری دی، تاکہ ملک کی ترقی کے لیے کلاؤڈ ٹیکنالوجی کی طاقت کو بروئے کار لایا جا سکے۔

عبوری کلاؤڈ آفس، جو مارچ 2022 میں قائم کیا گیا تھا، اس میں ممبر آئی ٹی، سید جنید امام تھے، جو ڈائریکٹر جنرل کلاؤڈ کا اضافی کردار ادا کر رہے تھے۔کلاؤڈ فرسٹ پالیسی کے تحت، نو تشکیل شدہ کلاؤڈ آفس کو ملکی اور بین الاقوامی دونوں معیاروں کے تحت سیکورٹی کی بنیادی خطوط کی وضاحت کرنے کا اختیار دیا گیا ہے۔

یہ بنیادی خطوط مختلف کلاؤڈ ماڈلز کے مطابق بنائے جائیں گے جو کہ ایک مضبوط اور محفوظ ڈیجیٹل انفراسٹرکچر کو یقینی بناتے ہوئے، پبلک سروس اداروں کے لیے مختلف ڈیٹا کلاسز کی میزبانی کے لیے نامزد کیے گئے ہیں۔اس مستقل کلاؤڈ آفس کے قیام سے مختلف شعبوں میں کلاؤڈ بیسڈ سلوشنز کے نفاذ کو تیز کرنے، جدت، کارکردگی کو فروغ دینے اور سائبر سیکیورٹی کے بہتر اقدامات کی توقع ہے

مزید خبریں

FOLLOW US

Copyright © 2024 Roshan Pakistan News