ایاز اکبر اڑھائی برسوں سے جرم بے گناہی میں بھارت کی جیلوں میں اسیری کاٹ رہے ہیں۔

مظفر آباد (سٹی رپورٹر )کشمیر میں جاری مزاحمتی تحریک کے صف اول کے آزادی پسند کشمیری رہنماء ترجمان سید علی شاہ گیلانی ایاز اکبر کی اہلیہ کی وفات پر گہرے صدمے اور دکھ کا اظہار کرتے ہوئے پاسبان حریت جموں کشمیر کے چئیرمین عزیر احمد غزالی نے اپنے ایک تعزیتی بیان میں  کہا ہے ایاز اکبر گزشتہ اڑھائی برسوں سے جرم بے گناہی میں بھارت کی جیلوں میں اسیری کاٹ رہے ہیں جبکہ انکی اہلیہ گزشتہ کئی عرصے سے ملک بیماری میں مبتلاء تھیں، قابض بھارتی انتظامیہ کی ہٹ دھرمی ، ضد اور کشمیری آزادی پسند رہنماوؤں کے خوف نے بھارتی فوج کی نیندوں کو حرام کر رکھا ہے ان کی بیمار اہلیہ کو علاج معالجے سے دور رکھا اور وہ آج داعی اجل کو لبیک کہ گئیں۔ ان کا مزید کہنا تھا کے ایاز اکبر کی غیر قانونی گرفتاری پر بھارت حکومت اور قابض انتظامیہ کی بھر پور مزمت کرتے ہیں جنھوں نے ہزاروں کشمیری شہریوں کو گرفتار کرکے جیلوں میں قید کر رکھا ہے ان کشمیری اسیران کے اہل خانہ غم و الم میں زندگی گزارنے پر مجبور ہیں ۔ انکا کہنا تھا کے ہم سب ایاز اکبر سے اظہار تعزیت کرتے ہوئے انکے دکھ اور درد کو اپنے دل میں محسوس کرتے ہیں۔ انھوں نے مرحومہ مغفورہ کے درجات کی بلندی کیلئے خدائے بزرگ و برتر سے دعاء کی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں