مہنگائی کنٹرول نہ ہوئی تو قومی مفادات کو مدنظر رکھتے ہوئے قومی حکومت بن سکتی ہے۔پیر سید صدر الدین شاہ راشدی

سانگھڑ (اشفاق سلہری )فنکشنل مسلم لیگ کے صوبائی صدر پیر سید صدرالدین شاہ راشدی نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا ہے کہ آنے والے دن میں میڈیا کی اہمیت بہت اہم ہوگی میڈیا پر فرض ہے کہ وہ حقیقت پر مبنی رپورٹنگ کرے۔ جب تک ایک ہی نیوز تین بار نہیں چلتی عوام کی توجہ کا مرکز نہیں بنتی ان کا کہناتھا کہ جو بھی ملک میں الیکشن ہوں اس سے عام آدمی کو فائدہ ہونا چاہے نا کہ ان کے لئے مشکلات پیدا ہوں ۔تعلیمی اداروں کو فعال ہونا چاہے سرکاری دفاتر میں کام ہونا چاہے تاکہ عام شخص کو پتہ چلے کہ تبدیلی آرہی ہے اگر میڈیا ایمانداری سےکام کرے تو یہ ادارے بہتر ہوسکتے ہیں ۔جب الیکشن قومی مفادات کے نام پر ہوتے ہیں تو اس کا فائدہ بھی قومی سطع پر سب کو ہونا چاہے ہارے ہوئے امیدوار قومی مفادات کو خاموشی سے دیکھتے چلے جائیں جب تک بلدیاتی الیکشن نہیں ہوتے تب تک اوپر کی سطح تک نظام مکمل نہیں ہوتا ہے۔اس لیے سب کا فرض ہے کہ عوام کو اگاہی دی جائے ان کا کہنا تھا کہ جی ڈی اے اینٹی پیپلز پارٹی یا کسی اور پارٹی میں نہیں جانا چاہتا ان لوگوں کے لئے جی ڈی اے ایک محفوظ اتحاد ہے۔ الیکشن سے قبل اتحاد بنتے بھی ہیں ٹوٹ بھی جاتے ہیں اور وسیع بھی ہوجاتے ہیں اگر مہنگائی کنٹرول نہ ہوئی تو قومی مفادات کو مدنظر رکھتے ہوئے قومی حکومت بن سکتی ہے ان کا کہنا تھا کہ جی ڈی اے کو ابھی تک کوئی بھی چھوڑ کرنہیں گیا ۔سندھ میں نئے صوبے کے حوالے سے ا ن کا کہنا تھا کہ کوئی بھی نیا صوبہ نہیں بن سکتا صوبہ بنانا مذاق نہیں ہے جو صوبے ہیں ان کو ہی مضبوط کرنے کی ضرورت ہے۔ کسی کی خواہش پر نیا صوبہ نہیں بن سکتا ۔ کالا باغ ڈیم سے قبل جو ڈیم بنائے گئے ہیں پہلے ان کو فعال کیا جائے اور ان میں گنجائش بڑھائی جائے۔ اس کے بعد اگر سسٹم میں پانی ہوا تو دوسرے ڈیموں کے بارے میں سوچا جاسکتا ہے سیاسی خواب دیکھنے والے سیاسی رہنماؤں کے حوالے سے کیے گئے سوال پر ان کا کہنا تھا کہ ہر کسی کی اپنی سوچ ہے میں ان سوالوں کو اہمیت نہیں دیتا اس موقع پر صوبائی جنرل سیکریٹری سردار رحیم بھی موجود تھے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں