اگر مجھے انصاف کی حکومت میں انصاف نا ملا تو میں اپنے خاندان سمیت وزیر اعظم ہاوس کے سامنے جان دے دوں گا۔جام محمد اسلم

اسلام آباد(سٹی رپورٹر) پرائم سٹی بہاولپورکے سی ای او جام محمد اسلم نے الزام عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ انکے رشتہ دار اور مخالفین چند نام نہاد صحافیوں، پولیس افسران، سیاسی ٹاؤٹ اور قبضہ مافیا وکیل کو ساتھ ملا کر انکی حاصل پور روڈ پر واقع پرائم سٹی ہاؤسنگ اسکیم پر قبضہ کرنا چاہتے ہیں، اس سلملے میں وہ ان پر قاتلانہ حملہ بھی کروا چکے ہیں تاہم خوش قسمتی سے وہ حملے میں محفوظ رہے، مخالفین بہاولپور شہر کے مختلف چوکوں چوراہوں پر پرائم سٹی کیخلاف پینا فلیکس آویزاں کر چکے ہیں جبکہ کئی جھوٹی ایف آئی آر بھی میرے خلاف درج کروائی گئی ہیں جو کہ تفتیش کے بعد خارج کر دی گئی ہیں،انہوں نے وزیراعظم، وزیراعلیٰ پنجاب، آرمی چیف اور چیف جسٹس سے اپیل کی ہے کہ وہ انہیں انساف مہیا کریں بصورت دیگر وہ اپنے اہلخانہ کے ہمراہ وزیراعظم ہاؤس کے باہر اپنی جان دے دینگے، نیشنل پریس کلب اسلام آباد میں اپنے اہلخانہ کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے پرائم سٹی بہاولپورکے سی ای او جام محمد اسلم کا کہنا تھا کہ وہ عرصہ بیس برس سے پراپرٹی کا کاروبار کر رہے ہیں جبکہ ڈیڑھ سال قبل پرائم سٹی ہاؤسنگ اسکیم کے نام سے منصوبہ شروع کیا، جس کا بلدیہ کی جانب سے ویریفیکیشن لیٹر اور تمام محکمہ جات سے این او سیز مل چکے ہیں، میری کامیابی سے خائف ہوکر میرے رشتہ دار اور مخالفین میری جان کے دشمن بن گئے ہیں اور وہ مجھ پر قاتلانہ حملہ کروا چکے ہیں تاہم خوش قسمتی سے میں حملے میں محفوظ رہا، رشتہ دار اور مخالفین چند نام نہاد صحافیوں، پولیس افسران، سیاسی ٹاؤٹ اور قبضہ مافیا وکیل کو ساتھ ملا کر انکی حاصل پور روڈ پر واقع پرائم سٹی ہاؤسنگ اسکیم پر قبضہ کرنا چاہتے ہیں، اس لئے وہ میرے خلاف جھوٹا پراپیگنڈہ کرنے میں مصروف ہیں، مخالفین بہاولپور شہر کے مختلف چوکوں چوراہوں پر پرائم سٹی کیخلاف پینا فلیکس آویزاں کر چکے ہیں جبکہ کئی جھوٹی ایف آئی آر بھی میرے خلاف درج کروائی گئی ہیں جو کہ تفتیش کے بعد خارج کر دی گئی ہیں، پرائم سٹی کا نقشہ، اپرول کی فائل میٹرو پولیٹن آفس سے تین بار غائب کروائی گئی اور آخری بار وفاقی وزیر طارق بشیر چیمہ کی مہربانی سے فائل واپس ملی، مجحے شہر میں بلیک میلر مشہور کرنے کی کوشش کی جارہی ہے تاکہ مجھے کوئی انصاف نہ مل سکے، اس سلسلے میں میرے خلاف دو جحوٹی پریس کانفرنسز کروائی گئیں اور میڈیا میں مجھے بدنام کیا گیا، جس سے میری ساکھ اور کاروبار کو شدید نقصان پہنچا، میری ہاؤسنگ اسکیم کے میٹل روڈز کو دن دھاڑے توڑا گیا جس سے مجھے ڈھائی کروڑ کا نقصان ہوا، جام محمد اسلم کا کہنا تھا کہ وہ اپنے مالی نقصان کے ازالے کیلئے عدالت میں کیس دائر کرینگے، انہوں نے وزیراعظم پاکستان عمران خان، وزیراعلیٰ پنجاب، عثمان بزدار، آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ، چیف جسٹس آف پاکستان اور چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ سے اپیل کی کہ میرے خلاف شہر مین لگے ہوئے پینا فلیکس اتروانے کا حکم جاری کیا جائے اور تمام سازشی عناصر کیخلاف بہاولپور کے پانچ تحانوں میں مقدمات درج کئے جائیں اور انہیں نشان عبرت بنایا جائے کیونکہ مالی نقصان کے ساتھ ساتھ مجھے ان سے جان کا بھی شدید خطرہ ہے، میرے تمام معاملات کو میرٹ پر حل کیا جائے تاکہ مجھے انصاف مہیا ہو سکے، جام محمد اسلم کا مزید کہنا تھا کہ اگر انکے مطالبات نہ مانے گئے تو وہ وزیراعظم ہاؤس کے باہر اپنے تمام اہلخانہ کے ہمراہ جان دینگے جس کے ذمہ دار یہ تمام 38 لوگ ہونگے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں