راولپنڈی تھانہ صادق آباد پولیس تاجروں کے سامنے بےبس علاقے میں کورونا ایس او پیز پر عملدرآمد کروانے میں مکمل طور پر ناکام

راولپنڈی (میاں عبد الباسط ) تھانہ صادق آباد کے علاقے میں کاروباری سرگرمیاں رات دس بجے کے بعد بھی عام معمول کی طرح جاری، بازاروں میں گہما گہمی عوام کی جانب سے ماسک پہننے کو نظر انداز اور ایس او پیز پر عملدرآمد نا ہونے کے برابر ہے نہ سماجی فاصلہ برقرار رکھا جا رہاہے حکومتی احکامات کے باوجود تاجروں کی جانب سے ایس او پیز کی خلاف ورزی ضلعی انتظامیہ اور راولپنڈی پولیس کی ناقص کارکردگی کا منہ بولتا ثبوت ہے، عوام کا رش بازاروں میں وقت کی پابندی نہ کرنا، ایس او پیز کی خلاف ورزیوں پر ضلعی انتظامیہ اور پولیس کی جانب سے کاروائی نہ کرنا یہ ثابت کرتا ہے کہ متعلقہ حکام کسی بڑے نقصان کا انتظار کر رہے ہیں واضح رہے گزشتہ سال صادق آباد بازار میں ایس او پیز پر عملدرآمد کروانے کیلئے پولیس اور رینجرز کے باقاعدہ اہلکار تعینات کیے گئے تھے، جبکہ اس سال کورونا کی تیسری لہر انتہائی خطرناک بتاتے ہوئے حکومت نے لاک ڈاؤن کی بجائے چھ بجے تک کاروباری سرگرمیاں جاری رکھنے جبکہ دو روز کاروباری سرگرمیاں مکمل طور پر بند رکھنے کے احکامات جاری کیے ہیں۔ این سی او سی کے حالیہ اجلاس میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا ہے کہ جس علاقہ میں کورونا کی شرح 13 فیصد ہوئی تو اس علاقہ میں مکمل لاک ڈاؤن لگایا جائے گا۔ سوشل میڈیا پر متحرک ضلعی انتظامیہ کے دوپہر کو دورے اور جرمانے کی متعدد پوسٹیں دیکھ کر کارکردگی کو سراہا جاتا ہے مگر رات کے اوقات کار میں ضلعی انتظامیہ اور پولیس کی غفلت کے باعث علاقہ میں کورونا کے پھیلاؤ میں مزید اضافے کا خدشہ ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں