پاکستان تحریک انصاف کے ایم این اے مذہبی اسکالر ڈاکٹر عامر لیاقت حسین کا سوشل میڈیا پر ہندو کمیونٹی کے خلاف متنازع ٹوئیٹ

اسلام آباد(تیمور خان)ریاست مدینہ کی دعویدار پی ٹی آئی حکومت کے ایم این اے مذہبی اسکالر ڈاکٹر عامر لیاقت حسین کا سوشل میڈیا پر متنازع ٹوئیٹ۔ پاکستان ہندو کونسل کے سربراہ ڈاکٹر رمیش کمار نے سوشل میڈیا سے فوری ڈیلیٹ کرنے کا مطالبہ کر دیا۔ان کا کہنا تھا
مذہبی اسکالر ہونے کے دعویدار سوشل میڈیا پر تضحیک آمیز مواد نشر کر رہے ہیں۔
پاکستان ہندو کونسل نے بلاسفیمی ایکٹ کے تحت سخت کاروائی کا مطالبہ کرتے ہوے کہا کے ڈاکٹر
عامر لیاقت حسین فوری طور پر ہندو دھرم سے منسوب اپنی ٹویٹ ڈیلیٹ کرکے معافی مانگیں۔ ڈاکٹر عامر لیاقت حسین کے نفرت انگیز اقدام سے ہندو کمیونٹی اضطرابی کیفیت میں مبتلا ہے۔پاکستان ہندو کونسل کے سربراہ ڈاکٹر رمیش کمار نے الٹی میٹم دیتے ہوے کہا ڈاکٹر عامر لیاقت حسین کو اپنی اس انتشار پھیلانے والی ٹوئیٹ پر ہندو کمیونٹی سے معافی مانگنی چاہیے اور اس بات کی یقین دہانی کرانی چاہیے کے وہ آئندہ ایسی شرمناک حرکت سے باز رہیں گے ۔معافی نا مانگنے کی صورت میں ڈاکٹر عامر لیاقت حسین کے خلاف بلا سفیمی ایکٹ کے تحت قانونی کاروائی کی جاے گی۔سربراہ پاکستان ہندو کونسل نے مزید کہا کمیونٹی میں اشتعال انگیزی پھیلانے پر ملک بھر میں احتجاج کا حق بھی محفوظ رکھتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں